سپریم کورٹ نے بازار میں تیزی کے دوران سیبی اور سیٹ کو ہوشیار رہنے کی مشورت دی ہے۔

سپریم کورٹ نے بین الاقوامی سیکیورٹیز اینڈ ایکسچینج کمیشن...

مرکزی حکومت کا الرٹ، وزارت صحت نے تمام ریاستوں کے لیے ایڈوائزری جاری کی

 مہاراشٹرا میں زیكا وائرس کے کچھ کیسز سامنے آنے...

بھارت-منگولیا مشترکہ فوجی مشق "نومیڈک ایلیفینٹ” میگھالیہ میں شروع

بھارت اور منگولیا کے مشترکہ فوجی مشق "نومیڈک ایلیفینٹ"...

ہاتھرس حادثے میں جاں بحق افراد کے لیے صدر اور وزیراعظم کی تعزیت

صدر دروپدی مرمو اور وزیراعظم نریندر مودی نے منگل...

راشٹریہ شکشک ایوارڈ کے لیے خود نامزدگی 15 جولائی تک: تعلیم وزارت

راشٹریہ شکشک ایوارڈ 2024 کے لیے اہل اساتذہ سے...

غریب ترین 20 فیصد آبادی کمر توڑ مہنگائی کی مار برداشت کر رہی: ملکارجن کھڑگے

نئی دہلی: کانگریس صدر ملکارجن کھڑگے نے جمعہ کو مہنگائی کے مسئلہ پر بی جے پی زیرقیادت مرکزی حکومت پر طنز کیا اور کہا کہ غریب ترین 20 فیصد آبادی کمر توڑ مہنگائی کی مار برداشت کر رہی ہے۔ ایکس پر ہندی میں کی گئی پوسٹ میں کانگریس صدر نے کہا، ’’مودی جی، ادھر ادھر کی باتیں کر کے عوام کی توجہ ‘مہنگائی کی لوٹ مار’ سے ہٹانا چاہتے ہیں!

انہوں نے کہا، ’’مودی حکومت کی لوٹ مار کی وجہ سے کمر توڑ مہنگائی کا سب سے زیادہ خمیازہ 20 فیصد غریب ترین لوگوں کو برداشت کرنا پڑا رہا ہے۔ کھانے پینے کی اشیاء کی قیمتیں آسمان کو چھو رہی ہیں اور ملک کو اب احساس ہو گیا ہے کہ ان کی پریشانیوں کی واحد وجہ بی جے پی ہی ہے۔‘‘

انہوں نے کہا کہ آنے والے انتخابات میں عوام بی جے پی کو سبق سکھا کر اس لوٹ کا بدلہ ضرور لیں گے۔ کانگریس لیڈر نے کہا، ’’مہنگائی کے معاملے پر – جڑے گا بھارت، جیتے گا انڈیا!” اس نے اپنے دعوؤں کی تائید کے لیے سی آر آئی ایس آئی ایل کی تحقیقی رپورٹ اور اگست کے لیے خوردہ افراط زر کے اعداد و شمار کے ساتھ گرافکس کا بھی اشتراک کیا۔