سپریم کورٹ نے بازار میں تیزی کے دوران سیبی اور سیٹ کو ہوشیار رہنے کی مشورت دی ہے۔

سپریم کورٹ نے بین الاقوامی سیکیورٹیز اینڈ ایکسچینج کمیشن...

مرکزی حکومت کا الرٹ، وزارت صحت نے تمام ریاستوں کے لیے ایڈوائزری جاری کی

 مہاراشٹرا میں زیكا وائرس کے کچھ کیسز سامنے آنے...

بھارت-منگولیا مشترکہ فوجی مشق "نومیڈک ایلیفینٹ” میگھالیہ میں شروع

بھارت اور منگولیا کے مشترکہ فوجی مشق "نومیڈک ایلیفینٹ"...

ہاتھرس حادثے میں جاں بحق افراد کے لیے صدر اور وزیراعظم کی تعزیت

صدر دروپدی مرمو اور وزیراعظم نریندر مودی نے منگل...

راشٹریہ شکشک ایوارڈ کے لیے خود نامزدگی 15 جولائی تک: تعلیم وزارت

راشٹریہ شکشک ایوارڈ 2024 کے لیے اہل اساتذہ سے...

مرکزی حکومت ہماچل سیلاب کو قومی آفت قرار دے: پرینکا گاندھی

کانگریس جنرل سکریٹری پرینکا گاندھی نے آج ہماچل پردیش کے وزیر اعلیٰ سکھوندر سنگھ سکھو کے ساتھ منڈی میں سیلاب متاثرہ علاقوں کا دورہ کیا اور دیوری گاؤں میں راحت و بازآبادکاری کی کوششوں کا جائزہ لیا۔ اس موقع پر انھوں نے منڈی میں کہا کہ ’’ہماچل میں جب آفت آئی تب ہماچل کے ہر باشندے کے دل میں ایک جذبہ پیدا ہوا کہ ہم اس آفت کا سامنا ایک ساتھ مل کر کریں گے۔ ہماری حکومت دن رات کام کر رہی ہے۔ جتنا نقصان آپ کا ہوا ہے، آپ کو اس کی پوری مدد ملے گی۔‘‘

پرینکا نے متاثرین سے کہا کہ ’’جن کے گھروں کا نقصان ہوا ہے، اس کے لیے حکومت معاوضہ دے گی۔ یہ پورا ملک آپ کے ساتھ کھڑا ہے۔ اگر مرکزی حکومت اسے ایک قومی آفت قرار دیتی ہے تو اس سے بہت راحت مل سکتی ہے۔‘‘ انھوں نے مزید کہا کہ ’’یہاں بہت دردناک حالت ہے اور بہت زیادہ نقصان ہوا ہے۔ وزیر اعلیٰ خود آفت کے وقت سے مدد کرنے میں مصروف ہیں۔ کچھ چیزیں صرف مرکزی حکومت ہی کر سکتی ہے اور مجھے امید ہے کہ وہ کرے گی۔ مجھے نہیں لگتا کوئی اس طرح کی آفت کا سیاسی ایشو بنانا چاہتا ہے۔ جب اتنا بڑا بحران آیا ہے تو پورے ملک کو متحد ہو کر مدد کرنی چاہیے۔‘‘

ہماچل پردیش کے وزیر اعلیٰ سکھوندر سنگھ سکھو نے اس موقع پر کہا کہ ’’میں نے پی ایم مودی کو کہا تھا کہ اسے قومی آفت قرار دیجیے۔ 12 ہزار کروڑ روپے سے زیادہ کا نقصان ہوا ہے۔‘‘ پھر انھوں نے کہا کہ ’’میں پرینکا گاندھی کا شکریہ کرنا چاہوں گا کہ انھوں نے آج ہماچل پردیش آ کر ہر جگہ دورہ کرنے کا ارادہ ظاہر کیا اور محسوس کیا کہ اسے قومی آفت قرار دیا جانا چاہیے۔ ہم سب کا یہی مطالبہ ہے۔‘‘