سپریم کورٹ نے بازار میں تیزی کے دوران سیبی اور سیٹ کو ہوشیار رہنے کی مشورت دی ہے۔

سپریم کورٹ نے بین الاقوامی سیکیورٹیز اینڈ ایکسچینج کمیشن...

مرکزی حکومت کا الرٹ، وزارت صحت نے تمام ریاستوں کے لیے ایڈوائزری جاری کی

 مہاراشٹرا میں زیكا وائرس کے کچھ کیسز سامنے آنے...

بھارت-منگولیا مشترکہ فوجی مشق "نومیڈک ایلیفینٹ” میگھالیہ میں شروع

بھارت اور منگولیا کے مشترکہ فوجی مشق "نومیڈک ایلیفینٹ"...

ہاتھرس حادثے میں جاں بحق افراد کے لیے صدر اور وزیراعظم کی تعزیت

صدر دروپدی مرمو اور وزیراعظم نریندر مودی نے منگل...

راشٹریہ شکشک ایوارڈ کے لیے خود نامزدگی 15 جولائی تک: تعلیم وزارت

راشٹریہ شکشک ایوارڈ 2024 کے لیے اہل اساتذہ سے...

عوام نے مودی حکومت کی وداعی کا راستہ بنانا شروع کر دیا ہے: کھڑگے

کانگریس صدر ملکارجن کھڑگے نے مہنگائی، بے روزگاری اور بدعنوانی کے ایشو پر مودی حکومت پر شدید حملہ کیا ہے۔ کانگریس صدر نے پیر کے روز سوشل میڈیا پلیٹ فارم ایکس پر لکھے اپنے پوسٹ میں کہا کہ پی ایم مودی سچائی پر پردہ ڈالنے کی پرزور کوشش کر رہے ہیں، لیکن عوام مودی حکومت کے دھیان بھٹکانے والے ایشوز کی جگہ سچ سننا اور دیکھنا چاہتی ہے۔

کھڑگے نے اپنے پوسٹ میں لکھا ہے کہ ’’اب جب جی-20 کی میٹنگ ختم ہو گئی ہے، مودی حکومت کو گھریلو ایشوز پر اپنی توجہ مرکوز کرنی چاہیے۔ اگست میں ایک عام کھانے کی تھالی کی قیمت 24 فیصد بڑھ گئی ہے۔ ملک میں بے روزگاری شرح 8 فیصد ہے۔ نوجوانوں کا مستقبل تاریک ہے۔‘‘

کانگریس صدر نے بدعنوانی کو لے کر بھی مودی حکومت پر حملہ کیا۔ انھوں نے لکھا کہ ’’مودی حکومت کی بدتر حکمرانی میں بدعنوانی کا سیلاب آ گیا ہے، سی اے جی نے کئی رپورٹس میں بی جے پی کی قلعی کھولی ہے۔ جموں و کشمیر میں 13 ہزار کروڑ کا ’جل جیون گھوٹالہ‘ سامنے آیا ہے جس میں ایک دلت آئی اے ایس افسر کو اس لیے ظلم کا شکار بنایا گیا کیونکہ انھوں نے بدعنوانی کو ظاہر کر دیا۔‘‘

کھڑگے نے اڈانی کو لے کر بھی پی ایم مودی پر حملہ کیا۔ انھوں نے کہا کہ وزیر اعظم کے خاص دوست کی لوٹ حال ہی میں پھر سامنے آئی ہے۔ آر بی آئی کے سابق ڈپٹی گورنر ورل آچاریہ نے 2019 انتخاب پہلے آر بی آئی کے خزانے سے مودی حکومت کو 3 لاکھ کروڑ منتقل کرنے کے سرکاری دباؤ کی مخالفت کی تھی، یہ معاملہ اب سامنے آیا ہے۔ کانگریس صدر نے کہا کہ منی پور میں گزشتہ کچھ دنوں میں پھر تشدد ہوا، ہماچل پردیش میں قدرتی آفت آئی ہوئی ہے، لیکن انا پرست مودی حکومت کو اس کو قومی آفت اعلان کرنے سے بچ رہی ہے۔

کانگریس صدر نے کہا کہ ان سب کے درمیان مودی جی سچائی پر پردہ ڈالنے کی پرزور کوشش کر رہے ہیں۔ لیکن عوام مودی حکومت کے دھیان بھٹکانے والے ایشوز کی جگہ سچ سننا اور دیکھنا چاہتی ہے۔ انھوں نے متنبہ کرتے ہوئے کہا کہ دھیان لگا کر سن لے مودی حکومت، 2024 میں آپ کی وداعی کا راستہ عوام نے بنانا شروع کر دیا ہے۔