سپریم کورٹ نے بازار میں تیزی کے دوران سیبی اور سیٹ کو ہوشیار رہنے کی مشورت دی ہے۔

سپریم کورٹ نے بین الاقوامی سیکیورٹیز اینڈ ایکسچینج کمیشن...

مرکزی حکومت کا الرٹ، وزارت صحت نے تمام ریاستوں کے لیے ایڈوائزری جاری کی

 مہاراشٹرا میں زیكا وائرس کے کچھ کیسز سامنے آنے...

بھارت-منگولیا مشترکہ فوجی مشق "نومیڈک ایلیفینٹ” میگھالیہ میں شروع

بھارت اور منگولیا کے مشترکہ فوجی مشق "نومیڈک ایلیفینٹ"...

ہاتھرس حادثے میں جاں بحق افراد کے لیے صدر اور وزیراعظم کی تعزیت

صدر دروپدی مرمو اور وزیراعظم نریندر مودی نے منگل...

راشٹریہ شکشک ایوارڈ کے لیے خود نامزدگی 15 جولائی تک: تعلیم وزارت

راشٹریہ شکشک ایوارڈ 2024 کے لیے اہل اساتذہ سے...

دیو گوڑا نے بی جے پی-جے ڈی ایس کے درمیان اتحاد کا رسمی اعلان کیا

جنتا دل (سکیولر) کے سپریمو اور سابق وزیر اعظم ایچ ڈی دیو گوڑا نے اتوار کے روز باضابطہ طور پر اپنی پارٹی اور بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کے درمیان 2024 کے لوک سبھا انتخابات سے قبل انتخابی اتحاد کا اعلان کیا۔

سابق وزیر اعظم  دیو گوڑا نے کہا کہ علاقائی پارٹی کو بچانے کے لیے اتحاد ضروری ہے اور آنے والے دنوں میں بی جے پی قیادت کے ساتھ بات چیت میں سیٹوں کی تقسیم کا معاہدہ طے پائے گا۔ انہوں نے کہا، "علاقائی پارٹی کو بچانے کے لیے اتحاد ضروری تھا۔ وہ (کانگریس) جے ڈی ایس کو تباہ کرنا چاہتی ہے۔
انہوں نے کہا، "سدارمیا نے 2018 میں چمنڈیشوری حلقہ میں جے ڈی ایس کے امیدوار جی ٹی دیو گوڑا کے خلاف اپنی شکست اور 2005 میں کچھ سیاسی پیش رفت کی وجہ سے پارٹی سے ان کا اخراج کا بدلہ لینے کے لیے جے ڈی ایس کو تباہ کرنے کی سازش کی تھی۔

یہ اعلان پارٹی کارکنوں کی میٹنگ میں کیا گیا جس میں مسٹر دیو گوڑا اور کرناٹک کے سابق وزیر اعلیٰ ایچ ڈی کمار سوامی نے بھی شرکت کی۔ کچھ دن پہلے، بی جے پی پارلیمانی بورڈ کے رکن بی ایس یدیورپا نے 2024 میں ہونے والے لوک سبھا انتخابات کے لیے بی جے پی اور جے ڈی ایس کے درمیان قبل از انتخاب اتحاد کی تصدیق کی تھی۔

پچھلے لوک سبھا انتخابات میں جے ڈی ایس نے کانگریس کے ساتھ سیٹ شیئرنگ فارمولہ طے کیا تھا، لیکن اس سے کسی پارٹی کو کوئی فائدہ نہیں ہوا۔میٹنگ سے خطاب کرتے ہوئے مسٹر دیو گوڑا نے اشارہ دیا کہ جے ڈی ایس کرناٹک کے جنوبی علاقے میں بی جے پی کو کچھ سیٹیں دے سکتی ہے، جہاں پارٹی کی مضبوط موجودگی ہے۔ انہوں نے کہا کہ "تمام (لوک سبھا) حلقوں میں بی جے پی کی بھی طاقت ہے۔
وزیر اعظم نریندر مودی کے ساتھ اپنی ملاقات میں مسٹر دیو گوڑا نے کہا کہ انہوں نے سیٹوں کی تقسیم کے بارے میں بات نہیں کی لیکن انہیں ریاست کے ہر حلقہ کی صورتحال سے آگاہ کیا۔