سپریم کورٹ نے بازار میں تیزی کے دوران سیبی اور سیٹ کو ہوشیار رہنے کی مشورت دی ہے۔

سپریم کورٹ نے بین الاقوامی سیکیورٹیز اینڈ ایکسچینج کمیشن...

مرکزی حکومت کا الرٹ، وزارت صحت نے تمام ریاستوں کے لیے ایڈوائزری جاری کی

 مہاراشٹرا میں زیكا وائرس کے کچھ کیسز سامنے آنے...

بھارت-منگولیا مشترکہ فوجی مشق "نومیڈک ایلیفینٹ” میگھالیہ میں شروع

بھارت اور منگولیا کے مشترکہ فوجی مشق "نومیڈک ایلیفینٹ"...

ہاتھرس حادثے میں جاں بحق افراد کے لیے صدر اور وزیراعظم کی تعزیت

صدر دروپدی مرمو اور وزیراعظم نریندر مودی نے منگل...

راشٹریہ شکشک ایوارڈ کے لیے خود نامزدگی 15 جولائی تک: تعلیم وزارت

راشٹریہ شکشک ایوارڈ 2024 کے لیے اہل اساتذہ سے...

تلنگانہ اسمبلی انتخاب: کانگریس صدر کھڑگے نے انتخاب سے متعلق کمیٹیوں کی تشکیل کو دی منظوری

کانگریس نے تلنگانہ میں آئندہ اسمبلی انتخابات کے لیے انتخابی انتظامیہ کمیٹی، منشور کمیٹی اور اسٹریٹجی سمیت مختلف کمیٹیوں کی تشکیل کا اعلان کر دیا۔ کانگریس کے تنظیم انچارج جنرل سکریٹری کے سی وینوگوپال کے ذریعہ نوٹیفکیشن کے مطابق دامودر راجہ نرسمہا انتخابی انتظامیہ کمیٹی کے چیف ہوں گے۔ پینل کے اراکین میں وامشی چند ریڈی، ای کومریا، جگن لال نائک اور فخرالدین کے نام شامل ہیں۔

ڈوڈیلا شری دھر بابو کو منشور کمیٹی کا چیف اور گدام پرساد کو ڈپٹی چیف مقرر کیا گیا ہے۔ اسٹریٹجی کمیٹی کا چیف پریم ساگر راؤ کو بنایا گیا ہے۔ اس کے علاوہ پارٹی نے اے آئی سی سی پروگرام عمل درآمد کمیٹی، تشہیر کمیٹی، فرد جرم کمیٹی، مواصلات کمیٹی اور تربیت کمیٹی کی بھی تشکیل کی ہے۔ پارٹی کے بیان میں کہا گیا ہے کہ کانگریس صدر ملکارجن کھڑگے نے ان کمیٹیوں کی تشکیل سے متعلق تجویز کو فوری اثر سے منظوری دے دی ہے۔ تلنگانہ میں اس سال کے آخر تک اسمبلی انتخابات ہونے ہیں اور اس کو لے کر کانگریس اب پوری طرح سرگرم ہو گئی ہے۔ کانگریس نے اعتماد ظاہر کیا ہے کہ وہ برسراقتدار بی آر ایس (بھارتیہ راشٹر سمیتی) کو اقتدار سے باہر کر دے گی۔