سپریم کورٹ نے بازار میں تیزی کے دوران سیبی اور سیٹ کو ہوشیار رہنے کی مشورت دی ہے۔

سپریم کورٹ نے بین الاقوامی سیکیورٹیز اینڈ ایکسچینج کمیشن...

مرکزی حکومت کا الرٹ، وزارت صحت نے تمام ریاستوں کے لیے ایڈوائزری جاری کی

 مہاراشٹرا میں زیكا وائرس کے کچھ کیسز سامنے آنے...

بھارت-منگولیا مشترکہ فوجی مشق "نومیڈک ایلیفینٹ” میگھالیہ میں شروع

بھارت اور منگولیا کے مشترکہ فوجی مشق "نومیڈک ایلیفینٹ"...

ہاتھرس حادثے میں جاں بحق افراد کے لیے صدر اور وزیراعظم کی تعزیت

صدر دروپدی مرمو اور وزیراعظم نریندر مودی نے منگل...

راشٹریہ شکشک ایوارڈ کے لیے خود نامزدگی 15 جولائی تک: تعلیم وزارت

راشٹریہ شکشک ایوارڈ 2024 کے لیے اہل اساتذہ سے...

طالبان کا امریکہ سے دوحہ معاہدے پر عمل کرنے کا مطالبہ

طالبان کے ترجمان نے کہا ’’دوحہ معاہدے پر عمل ہونا ضروری ہے۔ امریکہ کو افغانستان سے اپنی فوجوں کے انخلا کو یقینی بنانے کے لئے اس پر عمل کرنا چاہئے۔ یہ امریکہ اور ہمارے ملک دونوں کے مفاد میں ہوگا۔

کابل: طالبان نے امریکہ پر زور دیا ہے کہ وہ دوحہ معاہدے کی پاسداری کرے اور اپنی فوجیں افغانستان سے نکال لے۔

طالبان کے ترجمان ذبیح اللہ مجاہد نے بدھ کے روز جاری ایک بیان میں یہ بات کہی۔

اس سے قبل امریکی صدر جو بائیڈن نے اے بی سی نیوز کو بتایا ’’افغانستان سے امریکی فوجیوں کے مکمل انخلا کے لئے یکم مئی 2021 کی آخری تاریخ کی پیروی کرنا انتہائی مشکل ہے‘‘۔

طالبان کے ترجمان نے کہا ’’دوحہ معاہدے پر عمل ہونا ضروری ہے۔ امریکہ کو افغانستان سے اپنی فوجوں کے انخلا کو یقینی بنانے کے لئے اس پر عمل کرنا چاہئے۔ یہ امریکہ اور ہمارے ملک دونوں کے مفاد میں ہوگا۔

قابل ذکر ہے کہ فروری 2020 میں قطر کے دارالحکومت دوحہ میں امریکہ اور طالبان کے مابین افغانستان کے بارے میں ایک معاہدہ طے پایا تھا، جس میں امریکہ نے افغانستان سے اپنی فوجیں واپس بلانے کا عہد کیا تھا۔