کسان تحریک کو تیز کرنے کی کوششیں، کسان تنظیموں کے نمائندوں کا دارالحکومت آنا شروع

متحدہ کسان مورچہ کا اجلاس آج ہونے والا ہے، جس میں حکومت کی جانب سے مذاکرات کی تجویز اور دیگر امور پر تبادلہ خیال کیا جائے گا۔

نئی دہلی: زرعی اصلاحاتی قوانین کے خلاف کسان تنظیموں کا احتجاج آج 31 واں دن بھی جاری ہے۔

کسانوں کی تنظیم قومی دارالحکومت کی سرحدوں پر مسلسل مظاہرہ کر رہی ہے۔ دریں اثنا، سرحدوں پر سیکیورٹی سخت کردی گئی ہے۔

متحدہ کسان مورچہ کا اجلاس آج ہونے والا ہے، جس میں حکومت کی جانب سے مذاکرات کی تجویز اور دیگر امور پر تبادلہ خیال کیا جائے گا۔

کسان تنظیموں کے نمائندوں نے دارالحکومت آنا شروع کردیا ہے۔ یہ لوگ پنجاب، ہریانہ، اتر پردیش، اتراکھنڈ اور بہت سی دوسری ریاستوں سے آ رہے ہیں۔

اسے بھی پڑھیں:

کسان تحریک سے 14 ہزار کروڑ روپے کا نقصان، حکومت سے جلد سے جلد احتجاج کو ختم کرنے کا مطالبہ