سپریم کورٹ نے بازار میں تیزی کے دوران سیبی اور سیٹ کو ہوشیار رہنے کی مشورت دی ہے۔

سپریم کورٹ نے بین الاقوامی سیکیورٹیز اینڈ ایکسچینج کمیشن...

مرکزی حکومت کا الرٹ، وزارت صحت نے تمام ریاستوں کے لیے ایڈوائزری جاری کی

 مہاراشٹرا میں زیكا وائرس کے کچھ کیسز سامنے آنے...

بھارت-منگولیا مشترکہ فوجی مشق "نومیڈک ایلیفینٹ” میگھالیہ میں شروع

بھارت اور منگولیا کے مشترکہ فوجی مشق "نومیڈک ایلیفینٹ"...

ہاتھرس حادثے میں جاں بحق افراد کے لیے صدر اور وزیراعظم کی تعزیت

صدر دروپدی مرمو اور وزیراعظم نریندر مودی نے منگل...

راشٹریہ شکشک ایوارڈ کے لیے خود نامزدگی 15 جولائی تک: تعلیم وزارت

راشٹریہ شکشک ایوارڈ 2024 کے لیے اہل اساتذہ سے...

مغربی بنگال: سابق ڈی جی پی نپرجیت مکھرجی کی آر ایس ایس سربراہ موہن بھاگوت سے ملاقات

ذرائع کے مطابق، موہن بھاگوت کو اتوار کی شام نپرجیت مکھرجی کے گھر جانا تھا۔ لیکن سابق ڈی جی پی خود آر ایس ایس کے سربراہ کے پاس ملاقات کے لئے گئے۔ اس کے بعد سے ہی سیاسی میدان میں قیاس آرائیاں شروع ہوگئی ہیں۔ دوسری طرف، نپرجیت مکھرجی کی طرف سے کوئی بیان سامنے نہیں آیا ہے۔

کلکتہ: مغربی بنگال کے سابق ڈی جی پی نپرجیت مکھرجی نے اتوار کو کلکتہ میں آر ایس ایس کے سربراہ موہن بھاگوت سے ملاقات کی۔ اس کے بعد سے ہی سیاسی میدان میں قیاس آرائیاں شروع ہوگئی ہیں۔

موہن بھاگورت مغربی بنگال کے دو روزہ دورے پر تھے۔ انہوں نے کلکتہ میں پارٹی آفس کیشب بھون میں مکھرجی سے ملاقات کی۔ آر ایس ایس کا دعوی ہے کہ یہ ملاقات خیر سگالی کی ملاقات تھی۔ دوسری طرف، نپرجیت مکھرجی کی طرف سے کوئی بیان سامنے نہیں آیا ہے۔

ذرائع کے مطابق، موہن بھاگوت کو اتوار کی شام نپرجیت مکھرجی کے گھر جانا تھا۔ لیکن سابق ڈی جی پی خود آر ایس ایس کے سربراہ کے پاس ملاقات کے لئے گئے۔ جب وہ کیشب بھون میں داخل ہو رہے تھے تو اس وقت نپرجیت مکھرجی کے ہاتھ میں کچھ فائلیں تھیں۔

ذرائع کے مطابق بھاگوت اور نپرجیت کے درمیان کم از کم ایک گھنٹہ ملاقات کا سلسلہ جاری رہا۔ تاہم دونوں کے درمیان ملاقات کے وقت کیا بات ہوئی یہ بات سامنے نہیں آئی ہے۔ بھاگوت ہفتے کے روز دو روزہ دورے پر کولکاتہ پہنچے تھے۔ اتوار کے دن، وہ آرٹسٹ تیجندر نارائن مجمدار کے گھر گئے۔ تیجندر نارائن نے بتایا کہ وہ قریب دو گھنٹے تک ان کے گھر پر موجود تھے۔ وہاں انہوں نے کلاسیکل میوزک کا لطف لیا۔ تاہم، وہ اسمبلی انتخابات سے قبل ایک بار پھر کلکتہ آسکتے ہیں۔